in , ,

Fungus of the fingersAnd its solution in prophetic medicine

فطريات الأصابعوحلها في الطب النبوي
فطريات الأصابعوحلها في الطب النبوي

Fungus of the fingersAnd its solution in prophetic medicine

فطريات الأصابعوحلها في الطب النبوي
فطريات الأصابعوحلها في الطب النبوي

انگلیوں کی پھپھوندی کی تکلیف۔اور طب نبوی میں اس کا حل
Fungus of the fingersAnd its solution in prophetic medicine
فطريات الأصابعوحلها في الطب النبوي

حکیم المیوات قاری محمد یونس شاہد میو

اللہ تعالی نے ہمیں صحت کے لیے بے شمار زرائع بخشے ہیں، کچھ ذرائع تو ایسے ہیں جنہیںصحت کا ذریعہ بنایا گیا ہے عبادت کا درجہ دیا گیا ہے اللہ تعالی نے انسان کو پیدا کیا اور اسے معلوم ہے کہ اس کی ضروریات کیا ہیں؟ اس سے زندگی گزارنے کے بہترین طریقے بتائے
جن میں فرائض پانچ وقتہ ہیں نمازکی فرضیت ہے یہ ایک جبر نہیں ہے بلکہ طریقہ صحت کے مطابق اس میں بہت ساری گنجائش رکھی گئی ہےجو آدمی وضو کر سکتا ہے اسے پاکی کے لئے وضو کرنا چاہیے ۔

قرآن کریم میں ہے یا ایہا الذین آمنوا اذا قمتم للصلاۃ فاغسلوا ۔۔

کہ انسان کو عبادت کے وقت پاکی حاصل کرنی چاہیے اس کا طریقہ بھی بتایا کہ ہاتھوں کو کہنیوں تک دھوئے اور چہرے کو دھوئے ،پائوں دھوئےاس سلسلے میں جدید سائنس اور جدید طبی تحقیقات کہتی ہیں کہ ہاتھ پاؤں کی انگلیوں کا درمیانی حصہ کچھ لوگوں میں بہت حساس اور نازک ہوتا ہے ان میں اگر صفائی کا عمل روک دیا جائے تو پھپھوندی( fungus) لگ جاتی ہے ان کے لیے بہت تکلیف دہ ہوتی ہے

بسا اوقات تو یہ فنگس اتنی زیادہ ہو جاتی ہے کہ انگلیوں کو کاٹنے تک کی نوبت آجاتی ہے۔
وضو ایک ایسا عمل ہے کہ جس سے ہم فنگس کے عمل کو روک سکتے ہیں


وضو کے درمیان جو چیز ضروری قرار دی گئی ہے ان میں انگلیوں کا خلال بھی ہے، جب آدمی پانچ وقت انگلیوں کا خلال کرتا ہے تو ان کے درمیان ان ہاتھوں کی انگلیاں ایک دوسرے میں اور پاؤں کی انگلیوں میں چھوٹی انگلی سے رگڑا جاتا ہے۔مسح کیا جاتا ہے اور پانی پہنچایا جاتا ہے ۔اگر اعضائے وضو میں سے بال برابر جگہ بھی خشک رہ جائے تو وضو نہیں ہوتا ،تو انگلیوں کے درمیانی حصے میں میں خلال کرنا یعنی پانی کی تری پہنچانا ،انگلی کی مدد سے انہیں ملنا۔ یہ مسنون عمل ہے ۔اگر پانی ویسے ہی پہنچ جائے تو فریضہ ادا ہو جائے گا۔


لیکن اگر اس سے سے رگڑ کر اندرونی طور پر صاف کیا جائے تو امراض اور انگلیوں کی حساسیت کی کیفیت پیدا ہونے سے پہلے ہی ختم ہو جاتی ہیں۔ انگلیوں کا فنگس لگنا اور اور اس کی تکالیف اتنی بڑھی ہوئی ہے کہ ایک بہت بڑا طبقہ اس کا شکار ہے وضو میں جو چیز بتائی گئی ہے اس پر عمل کیا جائے تونوے فیصد تک کم ہو سکتے ہیں۔
البتہ کچھ لوگوں کو بیماری کی وجہ سے جیسے شوگر ہے چمبل وغیرہ ہیں یا درمیان حصہ بہت زیادہ بچا ہوا ہے میں ہوا کا گزر نہیں ہوتا اگر اس کو نہ چھیڑا جائے تو تھوڑے سے وقت کے بعد اس میں فنگس لگنا شروع ہو جاتی ہے اورتکلیف شروع ہو جاتی ہے اور کچھ لوگوں کے ناخن گوشت کے اندر داخل ہو جاتے ہیں ،جوتا پہنتے وقت زیادہ تکلیف کا سامنا کرنا پڑتا ہے

احتیاطی تدابیر


وضو میں انگلی کی مدد سے درمیانی حصے میں پانی پہنچائیں
وضو کے فوراً بعد اسے خشک کر لیا جائے ۔
اگر تکلیف زیادہ ہو تو پھٹکڑی کے پانی سے دھویا جا سکتا ہے
اگر میسر نہ ہو تو ٹیشو پیپر یا پھر روئی کا گالا اس کے اندر رکھا جا سکتا ہے ۔
جن لوگوں کو فنگس کی بیماری ہے انہیں چاہیے کہ
دیسی کیکر کی چھال لے کر اسے پانی میں والے اور اس کے درمیان پاؤں رکھیں اور یا پھر اس پانی سے پاؤں کو دھویا کریں
اگر ایسا نہ ہو سکے تو پھر چاہیے کہ انار کے چھلکے لے کر انہیں پانی میں ابالے اور ان سے پاؤں دھو لیا کریں۔
اگر مناسب سمجھیں تو گرم پانی میں ہلکا سا نمک ڈال کر اس سےپائوں دھویا کرے

میرا ماننا ہے کہ یہ ایک فنگل انفیکشن کی وجہ سے ہوتا ہے جو انگلیوں کو بے نقاب کرنے کے نتیجے میں ہوتا ہے، خاص طور پر ان کے درمیان، لمبے عرصے تک گیلے پن اور گیلے رہنے کی حالت میں، ان کو صاف کرنے کا خیال رکھے بغیر، اور انہیں خشک کرنے کا خیال رکھے بغیر، جو فنگس کی نشوونما کے لیے ایک موقع کے ظہور کا باعث بنتا ہے: اور یہ معلوم کرنے کے لیے کہ آیا یہ انفیکشن فنگس کی وجہ سے ہے یا یہ جلد کی دیگر بیماریوں جیسے چنبل، الرجی یا دیگر کا نتیجہ ہیں۔
جلد کی بیرونی تہہ، یا سیالوں کا نمونہ، ایک خوردبین کے نیچے جانچ کے لیے لیا جاتا ہے، تاکہ پھپھوندی کے وژن اور ان سے بڑھنے والی نشوونما کی تصدیق کی جا سکے۔ اسے لیبارٹری کی کاشت، علاج کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔ . میں آپ کو بتانا چاہوں گا کہ علاج میں کافی وقت لگتا ہے، یہ ایک سال تک چل سکتا ہے، کیونکہ اس کے لیے صبر، استقامت، مایوسی کی ضرورت نہیں ہے اور اس بہانے علاج کو روکنا ہے کہ یہ کام نہیں کرتا ہے۔
مرہم کے ذریعے علاج میں مرہم کے کیل میں گھسنے اور فنگس تک پہنچنے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔تاہم اس کا سہارا لینا چاہیے۔ Cyclopyrox Penlac نامی مرہم کو نیل پالش کی شکل میں استعمال کیا جا سکتا ہے نہ کہ صرف چکنا کرنے والا۔تاہم گولیاں اس کے ساتھ لیا جا سکتا ہے جس سے علاج کی کامیابی کی شرح بڑھ جاتی ہے۔اس کا نام Itraconazole Sporanox ہے 3 ماہ سے ایک سال تک، لیکن اس کی نگرانی ضروری ہے۔
ایک نئی امریکی دوا ہے جو تمام موجودہ دوائیوں سے زیادہ موثر ہے اور فی الحال اسے تجارتی نام نہیں دیا گیا بلکہ AN-2690 کا نام دیا گیا ہے۔ علاج کے دو اور نئے طریقے ہیں، لیکن ان سے نمٹنے کے لیے ماہر ڈرمیٹولوجسٹ کی ضرورت ہے: ++ امریکہ کی ہارورڈ یونیورسٹی کی ایجاد کردہ شارٹ ویو لائٹ کا استعمال۔ ++ ناخنوں میں گہری دراڑیں اور سوراخ کھولنا، لیکن محتاط رہیں کہ نرم بافتوں (جلد) تک نہ پہنچیں اور ان میں سے اینٹی فنگل مرہم ڈالیں۔ محتاط رہیں کہ ایسا کرنے کی کوشش خود نہ کریں، کیونکہ اس کے لیے ماہر ڈاکٹر کی ضرورت ہے۔ . میو کلینک کے ماہر امراض جلد اس قسم کے فنگل انفیکشن کو روکنے کے لیے درج ذیل عناصر میں اقدامات کا خلاصہ کرتے ہیں:
* اس بات کو یقینی بنائیں کہ آپ کے پاؤں خشک رہیں، خاص طور پر انگلیوں کے درمیان کی جلد کے حصے۔ اس لیے گھر کے اندر، یا باغ کے صاف حصوں میں ننگے پاؤں چلنا یقینی بنائیں۔
* قدرتی مواد، جیسے روئی، اون، یا مصنوعی دھاگے سے بنے موزے پہننا یقینی بنائیں جو نمی اور پسینے کی نمی کو جذب کرنے کی صلاحیت رکھتے ہوں۔ *
جب بھی موزے گیلے ہوجائیں اسے ضرور تبدیل کریں۔ یہاں تک کہ اگر آپ کے پیروں کو بہت زیادہ پسینہ آتا ہے، لیکن آپ کے جرابوں کو دن میں دو بار.
* پیروں کو ہوا دینے کے لیے سوراخ والے ہلکے جوتے ضرور پہنیں۔
* دن کے وقت جوتے ضرور بدلیں، تاکہ انہیں اندر سے خشک ہونے کا موقع ملے۔
* جب آپ عوامی مقامات پر ہوں، سوئمنگ پول اور دیگر مقامات پر سینڈل یا اونچی چپل پہن کر اپنے پیروں کی حفاظت کو یقینی بنائیں۔
* دوسرے لوگوں کے جوتے یا چپل استعمال نہ کریں۔
* روزانہ اپنے پیروں کے حصوں کو ضرور چیک کریں، خاص طور پر انگلیوں کے درمیان۔
* اپنے پیروں کو احتیاط سے دھونا یقینی بنائیں، خاص طور پر انگلیوں کے درمیان، دن میں کم از کم ایک بار۔ پاؤں کے تمام حصوں کو احتیاط سے خشک کریں، خاص طور پر انگلیوں کے درمیان

Written by admin

Leave a Reply

Your email address will not be published.

GIPHY App Key not set. Please check settings

فرنگیوں کا جال

Farangion Ka Jaal

کرشمات صدری عملیات،

کرشمات صدری عملیات،