in

واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہ حقائق و معارف

واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہ حقائق و معارف
واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہ حقائق و معارف

واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہ
حقائق و معارف

واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہحقائق و معارف
واقعہ کربلااورامام حسین رضی اللہ عنہ
حقائق و معارف

حکیم المیوات قاری محمد یونس شہاد میو

Advertisements

آج نو محرم الحرام1445ھ واقعہ فاجعہ کربلا کو1385سال بیت چکے ہیں
اس پر جتنی کتب لکھی گئیں اور اس واقعہ جس قدر بیان کیا گیا ہے شاید ہی کسی دوسرے واقعہ کو بیان کیا گیا ہو۔
اس واقعہ کو کچھ لوگ اپنی ضرورت اور کاروباری طورپر پیش کرتے ہیں۔کچھ اسے اپنے انداز میں بیان کرتے ہیں۔
واقعہ کربلا کی ایک حقیقت وہ ہے جسے لوگوں نے سمجھا اور لوگوں کو بتایا۔ایک رخ یہ ہے کہواقعہ کربلا واقع کیوں ہوا؟
مخالفت میں یہ دلیل پیش کی جاتی ہے کہ یزید نے حضرت سیدنا حسین کو شہید کیا۔واقعہ کربلا تو بعد میں پیش آیا۔سوچنے کی بات یہ ہے کہ حضرت حسین یزید کے خلاف کیوں نکلے؟وہ باتیں کونسی تھیں جن کے خلاف نکلنا پڑا۔اور یہ المناک واقعہ پیش آیا۔
لوگ صرف واقعہ کربلا کو پیش کرتے ہیں لیکن اس کے وقوع کے اسباب و عوامل کیا تھے اسے نظر انداز کردیتے ہیں
یعنی وہ کام جن کی بنیاد پر امام حسین کربلا پہنچے کو نظر انداز کردیتے ہیں۔

انہیں نکات کو اجاگر کرنا درحقیقت مشن کربلا کو زندہ کردینے میں معاون بن سکتا۔

 

واقعہ کربلا سچائی ومعارف

واقعہ کربلا اسلامی تاریخ کا ایک اہم تاریخی واقعہ ہے جو 10 محرم سنہ 680 عیسوی (61 ہجری) کو پیش آیا۔ اس کی کہانی پیغمبر اسلام (ص) کے نواسے امام حسین ابن علی اور ان کے پیروکاروں کی المناک شہادت کے گرد گھومتی ہے۔

واقعہ کربلا کے چند اہم حقائق اور بصیرت یہ ہیں:

پس منظر:

کربلا کا واقعہ تیسرے خلیفہ عثمان بن عفان کی وفات کے بعد خلافت کے لیے قیادت کی جدوجہد کے دوران پیش آیا۔ حسین کے والد علی ابن ابی طالب چوتھے خلیفہ بنے لیکن ان کی حکمرانی کو شام کے گورنر معاویہ نے چیلنج کیا جس نے عثمان کی موت کا بدلہ لینے کا مطالبہ کیا۔ معاویہ نے بالآخر خود کو خلیفہ قرار دیا اور اپنے بیٹے یزید کو اپنا جانشین نامزد کیا۔

باب:واقعہ کربلا - آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا

حسین کا انکار:
امام حسین نے یزید کی بیعت کرنے سے انکار کر دیا، کیونکہ وہ سمجھتے تھے کہ یزید کی قیادت ناانصافی، ظلم اور اسلامی اصولوں کی خرابی کا باعث بنے گی۔ اس کے بجائے، اس نے اپنے اصولوں کو برقرار رکھنے اور اسلام کی حقیقی تعلیمات کا دفاع کرنے کا انتخاب کیا۔

واقعہ کربلا - آزاد دائرۃ المعارف، ویکیپیڈیا

کربلا کا سفر:
مکہ شہر میں خونریزی سے بچنے کے لیے، حسین اور ان کا خاندان عراق میں کوفہ کے لیے روانہ ہوئے، اپنے حامیوں کی پکار پر لبیک کہتے ہوئے جو وہ چاہتے تھے کہ وہ یزید کی ناجائز حکومت کے خلاف جدوجہد کی قیادت کریں۔ تاہم کوفہ جاتے ہوئے انہیں یزید کی فوج نے روک لیا اور کربلا میں رکنے پر مجبور ہو گئے۔

المناک واقعات:
امام حسین علیہ السلام اور ان کے خاندان کے افراد اور وفادار ساتھیوں پر مشتمل چھوٹے گروہ کو ہزاروں سپاہیوں کی زبردست قوت کا سامنا کرنا پڑا۔ یہ جاننے کے باوجود کہ ان کی تعداد زیادہ ہے اور یقینی موت کا سامنا ہے، حسین اور اس کے پیروکار اپنے ایمان اور عزم پر ثابت قدم رہے۔

کربلا کی جنگ:
10 محرم کو عاشورہ بھی کہا جاتا ہے، جنگ کا آغاز ہوا۔ حسین کی فوجیں بہادری سے لڑیں لیکن پیاس اور تھکن کی وجہ سے بری طرح کمزور پڑ گئیں۔ اس جنگ کے نتیجے میں امام حسین اور ان کے اکثر ساتھیوں کی شہادت ہوئی۔

نتیجہ:

جنگ کے بعد، حسین کے کیمپ کی عورتوں اور بچوں کو اسیر کر لیا گیا اور اموی خلافت کے دارالحکومت دمشق تک ایک تکلیف دہ سفر کے ذریعے لے جایا گیا۔ کربلا کے سانحہ نے مسلم دنیا پر گہرے اثرات مرتب کیے اور اسلامی تاریخ کا ایک اہم واقعہ ہے۔

یادگار:
دنیا بھر کے مسلمان عاشورہ کے دن امام حسین کی شہادت کا سوگ مناتے ہیں، اجتماعات، جلوس، اور عزاداری کی تلاوت کے ساتھ جسے “مجلس” کہا جاتا ہے۔ یہ یادگاری اس بات کی یاددہانی کے طور پر کام کرتی ہے کہ نتائج سے قطع نظر ظلم اور جبر کے خلاف کھڑے ہونے کی اہمیت ہے۔

واقعہ کربلا مسلمانوں کے لیے انتہائی مذہبی، اخلاقی اور تاریخی اہمیت کا حامل ہے، کیونکہ یہ انصاف، سچائی اور اسلامی اصولوں کے تحفظ کی جدوجہد کی علامت ہے۔ یہ کسی کی اقدار اور اصولوں کو برقرار رکھنے کی اہمیت پر ایک لازوال سبق کے طور پر کام کرتا ہے، یہاں تک کہ زبردست مشکلات کے باوجود۔

  1. #Karbala
  2. #ImamHussein
  3. #Ashura
  4. #Martyrdom
  5. #IslamicHistory
  6. #StandForJustice
  7. #HusaynibnAli
  8. #Sacrifice
  9. #RememberingKarbala
  10. #IslamicLegacy

Written by admin

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

GIPHY App Key not set. Please check settings

Tehreek e Azadi e Hind mein Muslim Ulama aur Awam ka Kirdar

Tehreek e Azadi e Hind mein Muslim Ulama aur Awam ka Kirdar

QURAN SY cancer KA ELAJ

QURAN SY cancer KA ELAJ